eid poetry in urdu

Eid Poetry: Best Eid Mubarak Poetry Wishes in Urdu 2 Lines Text – PoeticExplorers

Spread the love

Eid Poetry In Urdu,

Eid poetry is like a happy song that talks about the good feelings during the celebration. Poets write special words that show how much we appreciate the joy, love, and togetherness of Eid. The poems talk about praying together, enjoying delicious meals, and sharing warm wishes.

They also remind us to be kind, generous, and thankful during this special time. The words in the poems sound nice and make the celebration even more fun. People read or share these poems with friends and family to express their happiness and togetherness during Eid.

Eid is the occasion of happiness and joy, In this blog we have collected heart touching Eid Mubarak Poetry for you. You can share it with your friend , family members, and everyone.

Trending Posts this month.

Best Sad Eid Poetry In Urdu 2 lines SMS Text

Eid poetry in urdu 1
eid poetry in urdu

دعا ہے آپ دیکھیں زندگی میں بیشمار عیدیں
خوشی سے رقص کرتی، مسکراتی بہار عیدیں

Dua hay aap dekhay zindagi may beyshumaar eidain
Khushi say raqs karti, muskurati bahar eidain

Eid Poetry In Urdu 2 Lines Text

eid poetry in urdu
eid poetry in urdu

یہ عید بھی گزری ہماری حسبِ سابق
کپڑے نئے تھے اور غم وہی پرانے

Yeh eid b guzri hamari hasb sabiq
Kapray naye thay aur gham wohi puranay

eid mubarak poetry in urdu
eid mubarak poetry in urdu

مل لیں گے ہم اپنے ہی گلے ڈال کے باہیں
اے بچھڑے ہوئے شخص، تجھے عید مبارک

Mil len ge hum –apne hi galaay daal ke baahein
Ae bichhre huwy shakhs tujhe eid mubarak

eid poetry in urdu 1 1
eid mubarak poetry in urdu

Sad Eid Poetry In Urdu

عید آئی ہے، مسرت کی پیامی بن کر
وہ مسرت جو تیری د ید سے وابستہ ہے

Eid ai hay, mussarat ki piyami ban ker
Wo mussarat jo tere eid say wabasta hay

eid poetry urdu
eid poetry urdu

اس سے ملنا تو اسے عید مبارک کہنا
یہ بھی کہنا کہ میرے عید مبارک کر دے

Uss say milna to usay eid Mubarak kehna
Yeh b kehna keh mere eid Mubarak ker day

Sad Eid Poetry In Urdu 2 lines text SMS

eid poetry in urdu
eid poetry in urdu

انہی سوچوں میں گزر جاتی ہیں عیدیں میری
کیا مجھے بھول کے وہ عید مناتا ہو گا

In he sochon main guzar jati haan eidain meri
Kiya mujhay bhool kay vo eid manatta ho ga

eid poetry in urdu
eid poetry in urdu

جس کے بغیر شام گزری نہ تھی کبھی
اُس کے بغیر عید گزر گئی

Jis k baghair sham guzri na thi kabhi
Uss k baghair eid guzar gai

sad eid poetry
sad eid poetry

عید کے دن نہ سہی، عید کے بعد سہی
عید تو ہم بھی منائیں گے تیری دید کے بعد

Eid k din na sahi, eid kay baad sahi
Eid to hum b manaye gay tere deed kay bad

sad eid poetry
sad eid poetry

آنکھ تم کو ہی جب نہ پائے گی
عید کیسے منائی جائے گی

Aankh tum ko hi jab na paye gi
Eid kesay manai jaye gi

Sad Eid Poetry In Urdu

eid poetry in urdu
eid poetry in urdu

تلخیاں چبھنے لگیں جب زیست کے پیمانے میں
درد کے ماروں نے گھول کے پیا عید کا چاند

Talkhiyan chubhnay lagin jab zeest kay pemanay main
Dard kay maroon nay ghol kay piya eid ka chand

eid poetry sad
eid poetry sad

لیکھاں وچ وچھوڑے رہ گئے
آنسو رو رو تھوڑے رہ گئے
اک نہ منی اُونے میری
ہتھ وی میرے جوڑے رہ گئے
بارش آئی پر تُوں نہ آیا
گلاب دے پھل وی تھوڑے رہ گئے
ہن تے آ کے مل جاسانوں، عید نوں دن وی تھوڑے رہ گئے

Lekhan vich vichorray reh gaye
Athro ro ro thorray reh gaye
Ik na manni oonay meri
Hath vi meray jorray reh gaye
Barish aai per tuun na aya
Gulab day phul vi thorray reh gaye
Hun tay aa kay mil ja saanu eid nu din vi thorray reh gaye

Emotional Eid Poetry In Urdu | Sad Eid Poetry

نہ ہاتھ دیا، نہ گلے لگے، نہ میسر تمہاری دید ہوئی
اب تم ہی بتاؤ یہ قیامت ہوئی کہ عید ہوئی

Nah haath diya, nah gilaay lagey, nah muyassar tumhari deed hui
Ab tum hi batao yeh qayamat hui ke eid hui

ہر ایک درد کی شدت چھپائی جائے گی
عید تو آخر عید ہے، منائی جائے گی

Har Ik Dard Ki Shiddat Chhupayi Jaye Gi
Eid To Aakhir Eid Hai, Manayi Jaye Gi

آنکھیں نم کر گئی بچھڑے ہوئے لوگوں کی یاد
وہ دیکھو دردِ دل دینے چلی آ رہی ہے عید

Ankhen num kar gayi bichhre huwy logon ki yaad
Woh dekho dard e dil dainay chali aa rahi hai eid

خدا کرے تمہیں یہ عید راس آ جائے
تم جس کو چاہو، وہ تمہارے پاس آ جائے

Khuda karay tumhay yeh eid raas aa jaye
Tum jis ko chaho, wo tumharay pas a jaye

کیا گزرتی ہے قیامت اس دل سے پوچھنا
دور ہو جس کا محبوب عید کے دنوں میں

Kya guzarti hai qayamat is dil se poochna
Daur ho jis ka mehboob eid ke dinon mein

میں عشق کے اعتکاف میں ہوں
دیدارِ یار ہو جائے تو عید کر لوں

Mein ishhq k aitekaf mein hon
Deedar yaar ho jaye to eid kar lon

Eid Poetry Urdu

کل عید کا دن بھی ہمیں بہت رلائے گا
کچھ بچھڑے ہوئے لوگوں کی پھر سے یاد دلائے گا

Kal eid ka din b hamein bohat rulay ga
Kuch bichhre hue logon ki phir sey yaad dilay ga

عید تو اُن کی ہوئی جن کو دیدارِ یار نصیب ہوا
اپنی عید بھی گزر گئی راہِ یار دیکھتے دیکھتے

Eid to un ki hui jin ko deedar yaar naseeb sun-Hwa
Apni eid b guzar gayi rah e yaar dekhte dekhte

کیا لطفِ عید ہے جو اگر تم سے دور ہے
گزرے گا روزِ عید تصور میں آپ کے

Kya lutaf eid hai jo agar tum se daur hai
Guzray ga roz eid tasawwur mein aap ke

عید پھیکی لگ رہی ہے عشق کی تاثیر بھیج
آ، گلے مل یا لباسِ عید میں تصویر بھیج

Eid pheeki lag rahi hai ishhq Ki taseer bhaij
Aa gilaay mil! ya Llbaas eid mein tasweer bhaij

تیرے دید کے بغیر کیسی عید
ہم نہیں منا سکتے ایسی عید

Tairay deed ke baghair kaisi eid
Hum nahi mana satke aisi eid

تجھ کو میری نہ مجھے تیری خبر جائے گی
عید اب کے بھی دبے پاؤں گزر جائے گی

Tujh ko meri nah mujhe teri khabar jaye gi
Eid ab k b dabey paon guzar jaye gi

عید کا چاند فلک پر نظر آیا جس دم
میری پلکوں پر ستارے تھے تیری یادوں کے

Eid ka Cha Nad Fallak Par Nazar Aaya Jis Dam
Meri Palkon Par Setaaray Thay Teri Yaado Ke

Sad Eid Poetry In Urdu

ہم نے تجھے دیکھا نہیں کیا عید منائیں
جس نے تجھے دیکھا ہو اُسے عید مبارک

Ham nay tujhy dekha nahi kiya eid manayain
Jis nay tujhy dekha ho ussy eid mubarak

عید کتنا میٹھا لفظ ہے نا
پھیکا پڑ جائے گا اگر تم نہ آئے تو

Eid kitna meetha lafz hai na
Pheka parr jaye ga agar tum na aye tu

عید کے بعد وہ آئے ہیں ملنے کے لیے
عید کا چاند نظر آنے لگا عید کے بعد

Eid kay baad wo aaye hain milnay kay liye
Eid ka chand nazar aanay laga eid kay baad

یہ کیسی عیدیں ہیں… اُداس کر جاتی ہیں
اپنوں سے ملنے کی پیدا ایک آس کر جاتی ہیں

Yeh kaisi eidain hain… udaas ker jati hain
Apnon say milnay ki peda ik aas ker jati hain

عید جب آتی ہے تو ملنے کا امکان رہتا ہے
مل کر کیا کہیں گے، سوچ کر دل پریشان رہتا ہے

Eid jab aati hai to milnay ka imkaan rehta hai
Mil kar kya kahin gay soch kar dil pareshan rehta hai

اس مہربان نظر کی عنایت کا شکریہ
تحفہ دیا ہے عید پر ہم کو جدائی کا

Is meharban nazar ki inayat ka shukriya
Tohfa diya hai eid pay hum ko judai ka

اپنے دل کا حال تجھے سناؤں کیسے
تو جو ساتھ نہیں، عید مناؤں کیسے

Apne dil ka haal tujhe sunaoun kaisay
To jo sath nahi eid manao kaisay

اے زندگی، مجھے کچھ مسکراہٹیں اُدھار دے
عید آنے والی ہے، مجھے رسمیں نبھانی ہیں

Ae zindagi mujhe kuch muskorahatein udhaar day
Eid anay wali hai mujhe rasmen nibhaani hain

Eid Poetry In Urdu

یادوں کی کتابوں کو سامنے رکھ کر
میری عیدیں بند کمرے میں گزر جاتی ہیں

Yaado ki kitabon ko samnay rakh kar
Meri eidain band kamray mein guzar jati hain

عید کے خیال نے خوش تو کر دیا لیکن
اب بھی سوچ کر تجھے دل بہت اُداس ہے

Eid k khayaal ne khush to Kar diya lekin
Ab b soch kar tumhe dil bohat udaas hai

دیس میں نکلا ہو گا کہیں عید کا چاند
پردیس میں آنکھیں کئی نم ہو گئی

Dais mein nikla hoga kahin eid ka chaand
Pardes mein ankhen kayi num ho gi

لوگوں کی عید ہو گی عید گاہوں میں
میری تو عید ہو گی تیری نگاہوں میں

Logon ki eid hogi eid gaahon mein
Meri to eid hogi teri Nnigahon Mein

Eid Poetry In Urdu

جن کا ملنے کا آسرا ہی نہیں
عید اُن کا خیال لاتی ہے

Jin ki milnay ka aasra hi nahi
Eid un ka khayaal latayen hai

کاش کوئی نہ لکھے شاعر دُکھ بھرے مرشد
حال دل کا ہو مسرت سے بیاں عید کے دن

Kash koi nah likhay shair dukh bharay murshid
Haal dil ka ho musarrat se bayan eid k din

احباب پوچھتے ہیں بڑی سادگی کے ساتھ
میں اب کے سال عید مناؤں گا کس طرح

Ahbab puchatay haan barri sadagi kay sath
Main abb kay saal eid manaon ga kis tarah

لوگ کہتے ہیں کہ عید آئی ہے
تم آ جاؤ تو یقین آ جائے

Log kehtay haan keh eid aai hai
Tum aa jao tu yaqeen aa jaye

جن راہوں سے تم گزرو
ان راہوں کو بھی عید مبارک

Jin rahon sy tum gzro
Un rahoon ko bi eid mubarak

اے صاحب علم، ذرا یہ بتاؤ مجھ کو
یار کا دیدار نہ ہو تو کیا عید ہوتی ہے

Aye sahib e illm zara ye batao mujh ko
Yaar ka deedar na ho tu kiya eid hoti hai

شاید تم آؤ میں نے اسی انتظار میں
اب کے برس بھی عید تنہا گزار دی

Shayad tum aao main nay issi intzar main
Ab kay bars bhi eid tanha guzar di

عید کا دن ہے گلے آج تو مل لے ظالم
رسم دنیا بھی ہے موقع بھی ہے دستور بھی ہے

Eid ka din hai galy aaj tu mil lay zalim
Rasm e duniya bhi hai mauqa bhi hai dastoor bhi ha

رہ گئی اس بار بھی حسرت اپنی
تم جو ہوتے تو تمہیں عید مبارک کہتے

Reh ha gai ais bar bee harsat apni
Tum jo hota to tumay eid mubarak kathay

تجھ کو میری نہ مجھے تیری خبر جائے گی
عید اب کے بھی دبے پاؤں گزر جائے گی۔

Tujh ko meri na mujhy teri khabar jaay ge,
Eid ab ke bhi dabe paaon guzar jaay ge.

عید آئی تم نہ آئے، کیا مزا ہے عید کا
عید ہی تو نام ہے ایک دوسرے کی دید کا۔

Eid aai tum na aye kia maza ha eid ka,
Eid hi tu naam ha ek doosry ki deed ka.

کہتے ہیں عید ہے آج، اپنی بھی عید ہوتی
ہم کو اگر میسر جاناں کی دید ہوتی۔

Kehte hain eid hay aaj, apni b eid hoti,
Hum ko agar muyasar jaana ki deed hoti.

Eid Poetry In Urdu

اُس سے ملنا تو اُسے عید مبارک کہنا
یہ بھی کہنا کہ میری عید مبارک کر دے۔

Us se milna tu use eid mubarak kehna,
Ye bhi kehna kh meri eid mubarak ker de.

اے ہوا تو ہی اُسے عید مبارک کہیو
اور کہیو کہ کوئی یاد کیا کرتا ہے

Ae hawa tu hi use eid mubarak kahyio
Aur kahyio kh koi yad kia kerta ha

عید تو اُن کی ہوئی جن کو دیدار یار نصیب ہوا
اپنی عید بھی گزر گئی راہ یار دیکھتے دیکھتے

Eid to un ki hui jin ko deedar yaar naseeb sun-hwa
Apni eid b guzar gayi rah o yaar dekhte dekhte

Eid Poetry Urdu

میری دعا ہے مناؤ ہزار عیدیں
مسرتوں کی تمہیں ہر گھڑی مبارک ہو

Mere dua hay manayo hazar eideeain
Mussaratu ki tumay her ghare mubarak ho

چاند نظر آتا ہے جس وقت مجھ کو عید کا
اور بھر جاتا ہے دل میں شوق تیرے دید کا

Chand nazer ata hay jis wakt muj ko eid ka
Aur bher jata hay dil may shok tere deed ka

تیرا دیدار کرے تجھ سے ملے عید کے دن
اور کیا اس کے سوا کوئی کرے عید کے دن۔
شاد ہر ایک کو میسر ہے خوشی کی سوغات
میرے غم کی بھی ذرا شام ڈھلے عید کے دن۔

Tera deedar kere tujh se mile eid ke din,
Aur kia is ke siwa koi kere eid ke din.
Shad her ek ko muyasar ha khoshi ki saoghat,
Mere gham ki bhi zera sham dhale eid ke din.

پیروی کیا کرتے تھے، تقلید کیا کرتے تھے
میری ہر بات کی، تائید کیا کرتے تھے۔
اب خدا جانے کہاں، اُن کے ٹھکانے ہیں
جو میرے ساتھ، کبھی عید کیا کرتے تھے۔

Pairwi kia karte thay, taqleed kia kartethay,
Meri har baat ki, ta’heed kia karte thay.
Ab khuda jaane kahan, unke thikane hain,
Jo mere saath, kabhi eid kia karte thay.

Conclusion.

In short, Eid poetry in Urdu is like a happy message that talks about the good feelings we have during the special celebration. These simple and nice words remind us of praying together, enjoying yummy food, and being grateful for our friends and family. Eid poetry is like a special language that makes everyone feel happy and connected, bringing joy to our hearts. It’s a simple and lovely tradition that makes the celebration even more special, sticking with us even after the happy days are over.

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *